Sun. Sep 15th, 2019

JKNS

Current News And More

شوغ بابا سملر بانڈی پورہ میں دوسرے روز بھی جھڑپ جاری رہی ۔ 2ملی ٹینٹوں کی نعشیں باز یاب /دفاعی ترجمان کپواڑہ کے قاضی آباد کرالہ گنڈ گاؤں میں سیکورٹی فورسز نے جنگجو مخالف آپریشن شروع کیا

جے کے این ایس ؍ شوغ بابا سملر بانڈی پورہ میں عسکریت پسندوں اور سیکورٹی فورسز کے درمیان دوسرے روز بھی گولیوں کا تبادلہ جاری رہا۔ دفاعی ترجمان نے دعویٰ کیا کہ جھڑپ کی جگہ دو عسکریت پسندوں کی نعشیں برآمد کی گئی ہے اور اُن کی شناخت کیلئے کارروائی شروع کی گئی ہے۔ ادھر قاضی آباد کپواڑہ کے گاؤں کو سیکورٹی فورسز نے محاصرے میں لے کر جنگجو مخالف آپریشن شروع کیا ۔ جے کے این ایس کے مطابق شوغ بابا سملر بانڈی پورہ میں محصو ر عسکریت پسندوں اور سیکورٹی فورسز کے درمیان دوسرے روز بھی گولیوں کا تبادلہ جاری رہا۔ نمائندے کے مطابق جمعہ اعلیٰ الصبح سیکورٹی فورسز نے جونہی آگے کی طرف پیش قدمی شروع کی اس دوران علاقے میں محصور عسکریت پسندوں نے جدید ہتھیاروں سے حملہ کیا۔ معلوم ہوا ہے کہ سیکورٹی فورسز نے بھی پوزیشن سنبھال کر جوابی کارروائی کی جس دوران کئی گھنٹوں تک دو بدو گولیوں کا تبادلہ جاری رہا۔ مقامی ذرائع نے بتایا کہ گھنے جنگلات کے باعث سیکورٹی فورسز کو مشکلات کا سامنا کرناپڑرہا ہے ۔ سیکورٹی فورسز کے اہلکار جونہی جنگلی علاقے کی طرف پیش قدمی شروع کرتے ہیں تو وہاں موجود عسکریت پسند حفاظتی عملے پر جدید ہتھیاروں سے حملہ کر رہے ہیں۔ دفاعی ترجمان کرنل راجیش کالیا کا کہنا ہے کہ شوغ بابا سملر بانڈی پورہ میں دو عسکریت پسندوں کی نعشیں برآمد کی گئی ہے۔ ترجمان کے مطابق علاقے میں موجود تین عسکریت پسندوں اور سیکورٹی فورسز کے درمیان دوبدو گولیوں کا تبادلہ جاری ہے۔ دریں اثنا عسکریت پسندوں کی موجودگی کی اطلاع ملنے کے بعد سیکورٹی فورسز نے کرالہ گنڈ قاضی آباد کپواڑہ کے علاقوں کو محاصرے میں لے کر تلاشی کارروائی شروع کی ۔ معلوم ہوا ہے کہ سیکورٹی فورسز نے علاقے کے لوگوں پر نگرانی رکھنے کیلئے ڈرون کیمروں کی بھی خدمات حاصل کی ۔ ذرائع نے بتایا کہ سیکورٹی فورسز کو مصدقہ اطلاع ملی ہے کہ علاقے میں عسکریت پسند چھپے بیٹھے ہیں جنہیں مار گرانے کیلئے اضافی کمک کو بھی طلب کیا گیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Copyright © All rights reserved. | Newsphere by AF themes.