Home

ہندوستان اور چین پینگونگ جھیل کے علاقے سے فوجیوں کو ہٹا رہے ہیں: راج ناتھ

دفاع راجناتھ سنگھ نے جمعرات کو ایوان میں ہند چین سرحدی تنازعہ پر بیان دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک کے مابین ایک معاہدہ طے پا یاہے۔ پینگونگ جھیل کے قریب دونوں ممالک اپنی فوج واپس لے گے۔ انہوں نے واضح کیا کہ ہم کسی کو بھی اپنی ایک انچ زمین نہیں لینے دیں گے۔ انہوں ںے پارلیمنٹ کو بتایا کہ فوجی کمانڈر سطح کے مذاکرات کے نویں دور کے بعد دونوں ممالک کے اتفاق کے بعد پینگونگ جھیل کے جنوبی اور شمالی ساحلوں پر تعینات افوج کو پیچھے ہٹانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔چین اور ہندوستان کی افواج کے درمیان گزشتہ سال مئی کے شروع سے مشرقی لداخ میں پیدا ہوئی کشیدگی کے بعد اب دونوں ہی ممالک کی پینگونگ جھیل کے جنوبی اور شمالی ساحلوں پر تعینات فوج نے پیچھے ہٹنا شروع کردیا ہے۔راجناتھ سنگھ نے کہا”مجھے ایوان کو یہ بتاتے ہوئے خوشی محسوس ہو رہی ہے کہ جاری مذاکرات کے نتیجے میں چین کے ساتھ پینگونگ جھیل کے شمالی اور جنوبی کنارے کو لیکر معاہدہ طے پایا ہے”۔راج ناتھ سنگھ نے مزیدکہا “میں اس ایوان کو یہ یقین دلانا چاہتا ہوں کہ ہم نے اس گفتگو میں کچھ بھی نہیں کھویا ہے۔ میں ایوان کو یہ بھی بتانا چاہتا ہوں کہ ایل اے سی پر تعیناتی اور گشت کے حوالے سے ابھی بھی کچھ امور باقی ہیں۔ ان پر ہماری توجہ آئندہ کی بات چیت میں ہوگی”۔انہوں نے کہا کہ دونوں فریق اس بات پر متفق ہیں کہ دوطرفہ معاہدوں اور پروٹوکول کے تحت مکمل طور پر پیچھے ہٹنے کے عمل کو جلد از جلد پورا کیا جانا چاہئے۔ چین اور ہند کی سرحد پر تنازعہ کے متعلق جانکاری دیتے ہوئے مرکزی وزیر نے کہا “میں ایوان کو یہ بھی بتانا چاہتا ہوں کہ ہندوستاننے چین کو ہمیشہ کہا ہے کہ باہمی رشتہ دونوں فریقوں کی کوششوں سے استوار ہوسکتا ہے، اسی طرح باہمی مسائل بھی بات چیت کے ذریعے ہی حل کئے جا سکتے ہیں”۔انہوں نے مزید کہا” مجھے یہ کہتے ہوئے فخر محسوس ہوتا ہے کہ ہندوستانی افواج نے مستقل طور پر تمام چیلنجوں کا مقابلہ کیا ہے اور انہوں نے پینگونگ تسو کے جنوبی اور شمالی کنارے پر اپنی بہادری کا مظاہرہ کیا ہے”۔انہوں نے کہا کہ ہندوستانی افواج بڑی ڈھٹائی کے ساتھ لداخ کی اونچی پہاڑیوں اور کئی میٹر برف کے درمیان سرحدوں کا دفاع کر رہی ہے اور اسی وجہ سے ہم مضبوط حالت میں ہیں۔راج ناتھ سنگھ نے کہا ” ہماری افواج نے بھی اس بار یہ ظاہر کیا ہے کہ وہ ہندوستان کی خودمختاری اور سالمیت کے تحفظ کے لئے ہر چیلنج کا مقابلہ کرنے کے لئے ہمیشہ تیار ہے”۔واضح رہے کہ کل ہی چین کی وزارت دفاع نے بیان جاری کرتے ہوئے کہا تھا کہ پینگونگ جھیل کے جنوبی اور شمالی ساحلوں پر چینی اور ہندوستانیسرحدی فوج نے پیچھے ہٹنا شروع کردیا ہے۔

Leave a Reply