Saturday, December 3

Day: September 21, 2022

شمالی کشمیر کے بدلتے ہوئے حالات
Editorial & Opinion, Home

شمالی کشمیر کے بدلتے ہوئے حالات

وادی کشمیر مذہبی رواداری اور بھائی چارے کا مسکن رہا ہے جہاں پر سبھی طبقہ جات سے وابستہ لوگ چاہئے ہندو ہو، مسلم، سکھ بودھ، عیسائی یا اور کسی مذہب کا ماننے والا ہو باہمی اتفاق اور اتحاد کے ساتھ دن گزاررہے تھے اور ایک دوسرے کے دکھ درد ، تہواروں اور شادی بیاہ کی تقاریب میں ایک دوسرے کے کام آتے تھے اور ہنسی خوشی اس بھائی چارے کو آگے بڑھارہے تھے۔ تاہم 1989میں ہوا بدل گئی اور وادی کشمیر میں ملٹنسی کا دور شروع ہوا جس نے یہاں کے مذہبی رواداری کے تانے بانے کو بکھیر کر رکھ دیا ۔جہاں ملٹنسی پاکستان کی شہہ پر شروع ہوئی تاہم اس کے ساتھ ساتھ یہاں کے نوجوانوں کے ذہنوںمیں مذہبی تضاد بھر دیا گیا جس کے نتیجے میں یہاں پر اُس ملی بھائی چارے کو غیروں کی نظر لگ گئی اور یہاں کے کشمیری پنڈت وادی چھوڑ کو ملک کے مختلف علاقوں میں ہجرت کرنے پر مجبور ہوئے اور سب سے زیادہ تعداد کشمیری پنڈتوں کی جموں میں قیام پذیر ہوئی ۔...